Kallar SyedanDailyNews

Kallar Syedan; Missing teenage girl found with police constable in Kallar

گوجرخان سے 17سالہ نوجوان کی گمشدگی ، رشتہ داروں نے نوجوان کو کلر سیداں کے پولیس کانسٹیبل خالد نیازی سے برآمد کر لیا

گوجرخان سے 17سالہ نوجوان کی گمشدگی ، رشتہ داروں نے نوجوان کو کلر سیداں کے پولیس کانسٹیبل خالد نیازی سے برآمد کر لیا۔گوجرخان سے آنے والے افراد نے پولیس کانسٹیبل خالد نیازی کو شدید تشدد کا نشانہ بنایا دونوں اطراف سے لاتوں مکوں کے استعمال سے فریقین متاثر ہوئے ۔حملہ آوروں نے سنگین الزامات عائد کئیے تفصیلات کے مطابق جمعہ کی شام گوجرخان سے چھ سات افراد ٹیلی فون ڈیٹا کی مدد سے اپنے عزیز 17سالہ شایان خان کو تلاش کرتے ہوئے کلر سیداں پہنچے جہاں انہوں نے پولیس کانسٹیبل خالد نیازی کی تحویل سے شایان خان کو برآمد کر کے پولیس کانسٹیبل کو شدید تشدد کا نشانہ بنایا ۔پولیس کانسٹیبل نے بھی انہیں مارا پیٹا ۔اس کے فوری بعد سینکڑوں شہری بھی کلر سیداں پولیس سٹیشن پہنچ گئے جہاں فریقین نے ایک دوسرے پر سنگین الزامات عائد کئیے جبکہ شایان خان نے تمام لوگوں کی موجودگی میں بیان دیا کہ وہ اپنے گھر والوں سے ناراض ہے اور اپنے ایک دوست ولی خان کی مدد سے وہ پولیس کانسٹیبل خالد نیازی کے پاس دو دن سے مقیم ہے اس کے ساتھ کسی نے کوئی زیادتی نہیں کی نہ ہی اسے کسی نے اغوا کیا۔

Kallar Syedan; A Missing teenage girl was found living with Khalid Niazi a police constable in Kallar Syedan, The relatives of the girl from Gujar Khan beat the hell out of the constable, but the girl gave statement that she was not abducted and was living with Niazi on her free will.

Show More

Related Articles